پاکستانی سیاستدانوں کو تو خیال نہ آیا مگر پاکستان میں سیلابی صورتحال پر امریکی سپر ماڈل بیلا حدید کے بیان نے کروڑوں پاکستانیوں کے دل جیت لیے

کیلیفورنیا(مانیٹرنگ ڈیسک ) مریکی سپر ماڈل بیلا حدید نے پاکستان میں سیلابی تباہی پر اظہار افسوس کیا اورحالات و اقعات سے آگاہ کرتے ہوئے عالمی برادری سے مدد کی اپیل کردی۔ تفصیلات کے مطابق امریکی ماڈل بیلا حدید نے سوشل میڈیا انسٹاگرام پر پاکستان میں آئے سیلاب کی تباہیوں سے متعلق پوسٹ شیئر کی ہے

جس میں انہوں نے یونسیف سمیت دیگر اداروں کی جانب سے شیئر کردہ متاثرین کی تصاویر اور ویڈیوز بھی پوسٹ کیں۔انہوں نے اپنی پوسٹ کے کیپشن میں بتایا کہ” پاکستان اس وقت ماحولیاتی تبدیلی کے باعث ہونے والی شدید بارشوں کے بعد سیلاب کا سامنا کر رہا ہے اور وہاں 3 کروڑ 30 لاکھ افراد اس سے متاثر ہوچکے ہیں”۔انہوں نے بتایا کہ “پاکستان کے چاروں صوبوں میں سیلاب سے تباہی آئی ہے اور وہاں ایک ہزار سے زائد لوگ موت کے منہ میں جا چکے ہیں، جن میں سے زیادہ تر بچے ہیں”۔

انہوں نے لکھا کہ “سیلاب سے 8 لاکھ مویشی بھی ہلاک ہوچکے ہیں جب کہ لاکھوں ایکڑ پر مشتمل فصلیں مکمل طور پر تباہ ہوچکی ہیں”۔انہوں نے لکھاکہ”متاثرہ علاقوں کا معاشی ڈھانچہ بکھر چکا ہے اور وہاں کی معیشت کو سہارا دینے کے لیے دنیا کو آگے آنا پڑے گا”۔انہوں نے سب سے مدد کی اپیل کرتے ہوئے لکھاکہ “پاکستانی سیلاب متاثرین دنیا کی مدد کے منتظر ہیں اور ہم سب کو ان کی مدد کے لیے آگے بڑھنا ہوگا”۔

امریکی ماڈل بیلا حدید نے اپنی پوسٹ میں سیلاب متاثرین کی مدد کے آسان طریقے بھی بتائے اور مداحوں کو بتایا کہ” ان کے عطیہ کردہ محض ڈھائی ڈالر سے حاملہ عورت اور کم عمر بچے کو خوراک فراہم کرنے کا پیکٹ آسکتے ہے”۔انہوں نے تفصیل بتاتے ہوئے لکھا کہ ” محض 12 ڈالر سے ایک خاندان کی خواتین کی ماہواری کے پیڈز، سینیٹائزر، ہینڈ واش اور دیگر حفظان صحت کے سامان کا پورا پیکٹ آسکتا ہے جو تین مہینے تک چل سکتا ہے”۔بیلا حدید نے لکھا کہ “لوگوں کی جانب سے عطیہ کردہ محض 55 امریکی ڈالر سے غذائی قلت کے شکار بچوں اور خواتین کے لیے 6 سے 8 ہفتوں کی خوراک خریدی جا سکتی ہے”۔