پاپولیشن پلاننگ پر بات کریں تو اسلام خطرے میں ہے،مفتاح اسماعیل معیشت کوبہتر کرنے کے بجائےخاندانی کے پیچھے دوڑنےلگے

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے کہاہےکہ پاپولیشن پلاننگ پر بات کریں تو کہا جاتا ہے اسلام خطرے میں آگیا۔ گزشتہ روز نجی ٹیو ی سے گفتگو کرتے ہوئے مفتاح اسماعیل نے کہا کہ جب مشرقی پاکستان الگ ہوا تو مغربی پاکستان کی آبادی کم تھی اور مشرقی پاکستان کی زیادہ تھی۔

انہوں نے کہا کہ آج پاکستان کی آبادی 23کروڑ اور وہاں بنگلا دیش کی آبادی 15کروڑ ہے، اب سوال یہ ہے کہ ہم کیا کررہے ہیں پاپولیشن پلاننگ کے حوالے سے مفتاح اسماعیل کا کہنا تھا کہ گزشتہ برسوں میں کئی حکومتیں آئی گئیں، کس نے اس پر کام کیا ؟ اگر کام کرتے ہیں تو کہا جاتا ہے اسلام خطرے میں آگیا۔